سر کا سایئں


الله تیرے سر کا سایئں سلامت رکھے !
بیٹی سن، اے بیٹی …
سر اٹھایا تو سامنے ایک بڑھیا کو کھڑے دیکھا ، چہرے پہ زمانے کی گرد اور ہاتھوں میں عمر کی لغزش . ایک آس ہی تو تھی آنکھوں میں کہ شاید ترس کھا لے اور ہتھیلی پر ایک سکّہ ہی رکھ دے . کیوں اتنا بےبس اور مجبور ہے انسان ؟ اس کی سوچیں نہ جانے اور کہاں تک پرواز کرتیں جب بڑھیا کی ایک اور صدا اسے حال میں واپس کھینچ لایی.
الله تیرے سر کا سایئں سلامت رکھے ، دے دے اس بڑھیا کو کچھ !
سر کا سایئں ! ایک سوچ لہرائی اس کے ذہن میں ، سر کا سایئں کون ہوتا ہے ؟ یہ سوچ خیالات کی رو میں بہتی ہوئی ہوا کی لہروں پہ بھٹکتی الفاظ کی صورت بڑھیا کی سماعت سے ٹکرائی . بولو اما سر کا سایئں کون ہوتا ہے ؟
تیرا گھر والا بیبی !
پھر تو میرا سر کا سایئں کوئی نہیں … جاؤ اما میرے سر کا کوئی سایئں نہیں !
الله تیرے بابے کو حیاتی دے !
الفاظ نے بڑھتے قدم روک لئے اس کے ، پلٹ کر غور سے دیکھا بڑھیا کو اور انجانے میں پرس میں ہاتھ ڈال کر جتنے روپے ہاتھ میں آے اسے تھماتے ہوے بولی ، اما یہ رکھ لو پر دعا کرنا کہ میرا بابا جہاں رہے الله اسے خوش رکھے !
بڑھیا نوٹ تھام کر بولی ، بیبی نوٹوں سے دعایئں خریدنے چلی ہے … یہ الفاظ ادا کرتے بڑھیا کے ہونٹوں پہ مسکراہٹ ابھری …
ایک خاموشی سے تکتی رہی اسے ….جا بیٹی الله تجھے تیرے سر کا سایئں دے …..
وو خود کو کہنے سے روک نہیں پائی ، اما سر کا سایئں صرف الله ہوتا ہے ، تیرا گھر والا تو بس ایک دنیاوی سہارا ہے ، کون جانے کب چھوٹ جائے ….
سر کا سایئں تو ہمیشہ رہنے والا ہے اور وہ میرے رب سوہنے کی ذات ہے !
بچی بہت گہری باتیں کرتی ہے ، اتنی گہرائی جس نے دی ہے کبھی اس سے من بھی لگایا ہے ؟ لگالے …. جس سے من لگایا ، اسے بھول جا ، وہ تیرے قابل نہیں تھا ! اس ذات سے من لگالے !
سر کا سایئں چاہتی ہے تو اس سے عشق کر کے تو دیکھ ، من کا سودا ہے یہ ، تن کا سودا کرے گی تو قیمت بھی ادا کرنی پڑے گی ….
وہ سب جانتا ہے !
بڑھیا جا چکی تھی پر وہ وہاں قدم تھام کر کھڑی تھی …. من کا سودا ، سر کا سایئں !
ارد گرد کی ہر شہ تھم چکی تھی سواے الفاظوں کی گونج کے ….
من کا سودا ، سر کا سایئں !

Advertisements

41 Comments

  1. من کا سودا ، سر کا سایئں
    Such small words with great depth in it.
    Thanks for sharing awesome piece of thought 🙂

    • thanks alot…i wish i could convey the true meaning of these lines 🙂

      • Do read Shah Abdul-Latif Bhatai & Bhulay Shah 🙂 or if you’ve some interest in spirituality then I’ll recommend “Kashf-ul-Majoob” of Data Sahab to understand the “Other World” 🙂

      • Wola….thanks alot….yes i a m very much into Spiritaulity….. can u tell me where can i download Kashf ul majoob????

  2. Woooah,
    see,i told you. Deep as a sea, you and your posts.. (:

  3. Masha’ALLAH, good to know that 🙂
    I’ve a pdf copy of it with me but let me check any download link of it and come back to you 🙂
    Take care.

  4. hey CU missed u…and really nice deep post..and ya MAN agar wahan lg jaye toh then what else we need…
    and its really hard to read urdu in this font…:S

    • 🙂 Wola…there are people who miss me…oh how greatful i am… 🙂

      so somehow you got my message in the post….

      :S what to do….google transliteration is not giving more clear font…. 😛

      • Yup, u were missed..so u shud be grateful :p…and ya, it was v hard to read it, but somehow managed..

      • 🙂 thanks for missing someone unknown…

        O_0 I want to make it clearly visible to read but….its not working… 😛

      • again my comments are not visible on your blog… :S

      • not missing unknown, but missing CU..blog wali CU 🙂 and dun know why comments don’t publish on my blog..i am unable to identify the problem..

      • check your pending comments option….you might need to approve them 🙂

      • hey CU u rocked 😀 :D.there were no pending comments but .i just checked spam comments and found lot of spam comments..nd urs too….oh now i found out the problem..thankssssss for identifying it 🙂

      • LOLZ….. so finally my comments will publish on your blog… 😀

        Spam comments 😛

      • Ya..never thought the comments could go in spam 🙂

  5. ایک طویل عرصے بعد اردو پڑھنے کا لطف آ گیا

    It’s a great piece!

    • 🙂 thanks Ayesha….was just scrumbling in my mind since last nite so brought it into black and white…. 🙂

    • how do i increase font size…google transliteration is not working…. :S

  6. firstly this font is quite small unable to readd well i managed it
    awsome n lovely post dee heads of 2 u dear
    i am luving u u r just outstanding:)

    • hey thanks Rida…. how r u princess? 🙂

    • And rida, the problem of comments not publishing got solved..all unpublished comments used to go to SPAM..so now u won’t have to try again and again 🙂

      • yeah i knwwwwwwwwww n thnks for commenting on my every post now i m waiting 4 some special person to comment on those:p

      • Who is this special one??? 🙂

      • well i think if i m writting on ur post so what does it mean

      • LOLZ…. oopsss….let me check your blog… 🙂

      • yeah u shuldddddddd

      • LOL @ CU asking who is that special person :p

  7. آپ اس طرح بڑے فونٹ میں لکھ سکتی ہیں

    You can utilize HTML code in this comment to enlarge font size of your posts.

    • Ok….got it…thanks…………… I will try next time…. 🙂

      Thanks for visiting my blog…keep visiting 🙂

  8. That is profound stuff very beautifully written! I’d like you to write more of such enlightening philosophies. I really like the way it has been written. Kudos! 🙂

  9. بہت ہی اچھا اور سچا لکھا ہے

    جیسا کہ پہلے بھی کسی نے کہا مزا آ گیا اردو پڑھنے کا !
    🙂

    میرے بلاگ پہ کومینٹ کرنے کا شکریہ


Comments RSS TrackBack Identifier URI

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s